counter easy hit

ایک ایک پائی واپس دینے کا وقت۔۔۔!!! چینی قرضے کب تک واپس کیے جائیں گے؟ عمران حکومت نے نا ممکن کو ممکن کر دکھایا، تاریخ کا اعلان کر دیا

اسلام آباد (نیوز ڈیسک ) پاکستان نے چین کے قرضوں کی واپسی کی تاریخ کا اعلان کر دیا، وفاقی وزیر حماد اظہر کا کہنا ہے کہ ہم اس قدر طاقت رکھتے ہیں کہ چین سے سی پیک منصوبے کے تحت حاصل کردہ قرضے واپس کر سکیں، تمام قرضہ 2022 تک واپس کر دیا

All Pakistan Government & Private Latest Jobs 2019 for 100+ Categories as Assistant Directors, Dy Directors, Dispatch Riders, Naib Qasid & Other

جائے گا۔ دوسری جانب وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ چین پاکستان اقتصادی راہداری (سی پیک) چینی صدر شی جن پنگ کے بیلٹ اینڈ روڈ انیشی ایٹو (بی آر آئی) کا فلیگ شپ منصوبہ ہے جس سے نہ صرف پاکستان کی اقتصادی ترقی کو تقویت دینے میں مدد ملے گی بلکہ علاقائی خوشحالی بھی آئے گی۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے چین کے سفیر، اقوام متحدہ کے سابق انڈر سیکرٹری جنرل اور چین پاکستان فرینڈشپ ایسوسی ایشن کے موجودہ صدر شازو کانگ سے گفتگو کرتے ہوئے کیا جنہوں نے چین کی صف اول کی کاروباری کمپنیوں کے وفد کی قیادت کرتے ہوئے وزیراعظم سے ملاقات کی۔چینی سفیر شازوکانگ پاکستان کا دورہ کرنے والی چین کی صف اول کی کمپنیوں کی قیادت کر رہے ہیں جو کاروباری صلاحیتوں اور سرمایہ کاری کے مواقعوں کی تلاش میں پاکستان کے دورے پر ہیں۔وزیراعظم عمران خان نے پاک چین تعلقات کی قربت اور گہرائی کی اہمیت کو اجاگر کیا اور کہا کہ سی پیک قسمت بدلنے کا ایک منصوبہ ہے۔ انہوں نے چینی کمپنیوں اور کاروباری برادری کو پاکستان کے متنوع شعبوں میں سرمایہ کاری کی دعوت دی۔اس موقع پر چینی سفیر شازوکانگ نے کہا کہ پاکستان اور چین تمام موسموں کے تذویراتی تعاون کے شراکت دار ہیں ، ان کی شراکت داری کا مقصد خطے میں امن، ترقی اور خوشحالی کو فروغ دینا ہے۔انہوں نے کہا کہ دونوں ممالک کے درمیان خصوصی تعلقات گرمجوشی کے احساسات کا عکاس ہیں، چینی عوام نے ہر موقع پر پاکستان کے لئے اس کا اظہار کیا ہے۔ چینی سفیر شازو کانگ نے زور دیا کہ چینی سرمایہ کار پاکستان کی اقتصادی صلاحیت سے متعلق بااعتماد ہیں اور توقع کرتے ہیں کہ دونوں ممالک کے درمیان اقتصادی تعلقات اپنے عروج کی سطح پر پہنچیں گے۔وفد میں ریئل اسٹیٹ، تعمیرات، انجینئرنگ، ٹیکسٹائل، انفارمیشن ٹیکنالوجی اور صنعتی شعبہ سے وابستہ کمپنیاں شامل ہیں۔ وفد نے پیر کو پشاور کا بھی دورہ کیا جبکہ لاہور، کراچی اور گوادر کا دورہ بھی ان کے شیڈول میں شامل ہے۔ وفد صف اول کے بینکاروں، صنعتکاروں، کاروباری اداروں، مالیاتی شعبہ کے ماہرین، تجارتی ایوانوں کے نمائندگان اور سینئر افسران سے بھی ملاقاتیں کرے گا تاکہ پاکستان میں اقتصادی مواقعوں سے متعلق فہم و فراست اور تفصیلات حاصل کر سکیں۔

Pakistan Jobs 2019 for 100+ Assistant Directors, Dy Directors, Dispatch Riders, Naib Qasid & Other

now, its, time, to, return, every, penny, to, china

About MH Kazmi

Journalism is not something we are earning, it is the treasure that we have to save for our generations. Strong believer of constructive role of Journalism in future world.

Connect

Follow on Twitter Connect on Facebook View all Posts Visit Website